”پولیس والوں سے نہ دوستی اچھی نہ دشمنی :“

کراچی (ویب ڈیسک) کراچی کے زمان ٹاؤن تھانے کے اندر ٹک ٹاکر لڑکی سے غلط کاری کرنے والے پولیس اہلکار کو گرفتار کر لیا گیا، لڑکی اہلکار کے خلاف غلط کاری اور سنگین نتائج کی وارننگ ملنے کے خلاف شکایت کرنے آئی تھی۔کورنگی کے زمان ٹاؤن تھانے میں ٹک ٹاکر امبرین کے ساتھ غلط کاری کرنے والے

 

 

 

 

 

پولیس اہلکار عثمان کو گزشتہ روز پولیس نے گلشنِ اقبال سے گرفتار کر لیا ہے۔پولیس اہلکار عثمان کے خلاف امبرین سے غلط کاری کا مقدمہ زمان ٹاؤن تھانے میں درج ہے، پولیس اہلکار عثمان 20 مئی کو لانڈھی تھانے سے ٹرانسفر ہو کر زمان ٹاؤن تھانے آیا تھا، 2 اگست کو گرفتار اہلکار کو ایس ایس پی کورنگی نے معطل کیا تھا۔متاثرہ لڑکی نے بتایا کہ اہلکار عثمان کے خلاف شکایت کرنے زمان ٹاؤن تھانے گئی تھی، عثمان نے مجھے زمان ٹاؤن تھانے میں بھی نشانہ بنایا۔لڑکی کے مطابق ایک پولیس اہلکار کو عثمان نے تھانے کے دروازے پر چوکیداری کے لیے کھڑا کیا تھا۔ٹک ٹاکر لڑکی کا کہنا ہے کہ مجھے پولیس میں جانے کا شوق تھا، پولیس اہلکار عثمان مجھے ٹک ٹاک بنانے کے لیے ہتھیار بھی دیتا اور موبائل میں گھماتا تھا۔لڑکی نے الزام عائد کیا کہ پولیس اہلکار عثمان نے نوکری دلانے کے بہانے مجھے پہلے گیسٹ ہاؤس میں غلط کام کا نشانہ بنایا، اس نے میری ویڈیو بنائی جس کے ذریعے وہ مجھے پریشرائز کرتا اور بار بار نشانہ بناتا رہا ۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.