غریب کو آٹا انتہائی سستا ملے گا، حکومت نے بڑی خوشخبری سنا دی

فی من مقرر کی گئی ہے جس سے آٹے کی فی کلو قیمت 55 روپے اور 20 کلو تھیلے کی قیمت 1100روپے تک ہو گی، پورے ملک میں گندم اورآٹے کی ایک ہی قیمت مقرر کرنے کے حوالے سے بات چیت کی گئی تاہم تمام صوبے کابینہ کے اجلاسوں میں اسے زیر بحث لا کر حتمی فیصلہ کریں گے ۔اپنے ایک بیان میں انہوں

 

 

 

 

 

نے کہا کہ بھارت میں اس وقت آٹے کی فی کلو قیمت 56 روپے ، بنگلہ دیش میں 80 روپے اور افغانستان میں اس سے زیادہ ہے، پاکستان میں قیمت نہ صرف پورے خطے بلکہ دنیا کے دیگر ممالک سے بھی کم ہے اوراسے بر قرار رکھیں گے۔ جو لوگ زیادہ غریب ہیں ان کا ڈیٹا موجود ہے، انہیں آٹا گزشتہ سال کی 43 روپے فی کلو قیمت پر فراہم کریں گے، وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت اجلاس کے فالو اپ میں چاروں صوبوں کا اجلاس ہوا ہے۔یہ مشاورت کی گئی ہے کہ مرکز اور صوبے گندم اور آٹے کی ایک ہی قیمت رکھیں گے تاہم اس حوالے سے تمامصوبے کابینہ میں اسے زیر بحث لا کر حتمی فیصلے لیں گے۔ انہوں نے کہا کہ امید ہے صوبے اگلے ہفتے سے سرکاری گندم کی ریلیز شروع کر دیں گے اور اس کی قیمت ایک ہی طے ہو گی ،نجی شعبے کو کسی صورت بھی حکومت کے طے کردہ نرخ سے زائد پر فروخت کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ جمشید اقبال چیمہ نے کہا کہ حکومت کے پاس گندم کے وافر ذخائر موجود ہیں، سرکاری گندم کی ریلیز کیلئے لبرل پالیسی ہو گی۔ عوام تسلی رکھیں انہیںسستا اور معیاری آٹا فراہم کیا جائے گا اورحکومت کڑی نگرانی کو یقینی بنائے گی ۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.