خان صاحب: اتنے ظالم نہ بنو کچھ مروت بھی سیکھ لو

تاجکستان میں بزنس فورم کے اجلاس میں تنقیدی نظم پڑھنے پر وزیراعظم عمران خان نے شاعر کو روک دیا۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان تاجکستان مشترکہ بزنس فورم کا آغازہوا ، جس سے وزیراعظم عمران خان نے خطاب کیا بعد ازاں وہاں موجود ایک بزنس مین نے کہا کہ حکومت پاکستان پبلک سیکٹر کے بچوں کو اسکالر

 

 

 

 

 

شپ دے رہی ہے جبکہ پرائیویٹ سیکٹر کے بچوں کو نہیں دی رہی، میری رزاق داؤد اور وزیراعظم عمران خان سے گزارش ہے کہ وہ اس پر بھی غور کریں ۔ بعد ازاں انہوں نے ایک شعر سناتے ہوئے کہا کہ یہ پاکستان کہہ رہا ہے کہ کچھ اپنے بھی دل پر زخم کھاؤ …میرے لہو کی بہار کب تک …مجھے سہارا بنانے والوں میں لڑکھڑایا تو کیا کروگے۔ جس کے بعد مذکورہ بزنس مین نے کہا کہ آخر میں عمران خان صاحب آپ کے لئے ایک شعر ہے اتنے ظالم نہ بنو ،عمران بھائی آپ کے لئے ۔آپ تو اب ایک قیدی ہوگئے، جب کنٹینر پر تھے تو زبردست تھے ۔ اب تو پتہ نہیں کن کے چکروں میں آپ آگئے ہیں۔ وہ کہتا ہے کہ اتنے ظالم نہ بنو کچھ تو مروت ہی سیکھو ۔ جس پر رزاق داؤد نے ہاتھ کے اشارے سے مذکورہ شاعر کو روکنے کی کوشش کی اس موقع پر سرکاری ٹی وی کی آواز بند کردی گئی بعد ازاں عمران خان نے کہا کہ سوال و جواب میں بزنس کی باتیں کریں، شعر و شاعری بعد میں ہوگی ۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *