آگئی تبدیلی، چھا گئی تبدیلی! مہنگائی سے تنگ عوام کو اب ماہانہ کتنے پیسے دیئے جائیں گے؟

اشیا خوردونوش کی قیمتوں میں اضافے پر حکومت کا ماہانہ سبسڈی دینے کا پلان تیار، احساس پروگرام کے تحت حکومت پسماندہ طبقے کو ماہانہ 1000 روپے بطور سبسڈی دے گی۔تفصیلات کے مطابق بڑھتی ہوئی مہنگائی پر قابو پانے اور شہریوں کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے حکومت نے ہنگامی بنیادوں پر بڑا فیصلہ کیا ہے۔ حکومت 31 ہزار روپے سے کم آمدن

 

 

 

 

 

والوں کو 1000 روپے احساس کفالت پروگرام کے تحت دے گی۔ اشیا خوردونوش پر سبسڈی کیساتھ ساتھ عوام کو ماہانہ پیسے بھی ملیں گے۔ یہ رقم کھانے پینے کی اشیا میں سبسڈی کے علاوہ عوام کو دی جائے گی۔حکومت نے بڑھتی ہوئی مہنگائی پر اس سال 72 ارب روپےکی سبسڈی کا تخمینہ لگایا ہے۔ صوبائی حکومتوں کے تعاون سے یہ سبسڈی اس مالی سال میں دی جائے گی۔ پنجاب حکومت 37 ارب،خیبر پختونخوا 12 ارب روپے، سندھ حکومت 16 ارب اور بلوچستان میں 4 ارب روپے کا سبسڈی پیکج دیا جائے گا۔اسی طرح آزاد جمعوں کشمیر اور گلگت بلتستان سمیت اسلام آباد میں 2 اعشاریہ 5 ارب روپے سبسڈی دی جائے گی۔ یہ سفارشات وزیر اعظم پاکستان کو باقاعدہ پیش کردیں گئیں ہیں۔ آج کل مہنگائی نے عوام کی کمر توڑ دی ہے اور ہر کوئی رو رہا ہے کیوں کہ لوگوں کا گزارا نہیں ہو رہا غریب غریب سے غریب تک ہو تا جا رہا ہے اور امیر امیر سے امیر تر ہوتا جا رہا ہے لوگ عمران خان سے درخواست کر رہے ہیں کہ خدارا مہنگائی کم کریں، مزید خبروں تبصروں تجیزوں اور کالمز پڑھنے اور ہر وقت چوبیس گھنٹے اپ ڈیٹ رہنے اور ملک کے حالات سے با خبر رہنے کیلئے ہمارا پیج لائیک اور شیئر ضرور کریں اور اپنے دوستوں سے بھی شیئر کی درخواست کریں ہم آپ کے بے حد مشکور ہوں گے شکریہ

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.