’’خوبصورت مردوں کی کمی نہیں لیکن اشتہارات میں خواتین ہوتی ہیں‘‘ مولانا طاہر اشرفی پھٹ پڑے

وزیراعظم عمران خان معاون خصوصی طاہر محمود اشرفی نے کہا ہے کہ ملک میں خوبصورت مردوں کی کمی نہیں ہے لیکن اشتہارات کیلئے خواتین کو کاسٹ کیا جاتا ہے ۔ طاہر اشرفی نے کہا ہے کہ ہر چیز میں عورت کا کردار ڈالنے کے سخت خلاف ہیں ملک میں خوبصورت مردوں کی کمی نہیں ہے لیکن پھر بھی خواتین کو

 

 

 

 

اشتہارات میں شامل کیا جاتا ہے ۔ لہٰذا اشتہارات میں غیر ضروری طور پر عورتوں کا کردار شامل کرنے پر پیمرا اور پی ٹی اے سے رجوع کریں گے۔تفصیلات کے مطابق پاکستان علماء کونسل کی مرکزی مجلس شوریٰ و عاملہ نے انتہا پسندی ،د ہشت گردی کے خلاف ملک گیر سطح پر رابطہ مہم چلانے کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک بھر میں علماء و مشائخ کنونشنز اور علماء ، خطبائ، آئمہ ، مدرسین کیلئے تربیتی نشستیں ہونگی ،20 فروری کو پانچویں پیغام اسلام کانفرنس کنونشن سینٹر اسلام آباد میں منعقد ہوگی جس میں امام حرم کعبہ ، مفتی اعظم فلسطین شریک ہوں گے۔پاکستان علماء کونسل کی مرکزی مجلس شوریٰ و عاملہ کے اجلاس میں ملک بھر سے علماء و مشائخ نے شرکت کی ،اجلاس کی صدارت حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے کی ۔ اجلاس میں انتہا پسندی ،د ہشت گردی کے خلاف ملک گیر سطح پر رابطہ مہم چلانے کا فیصلہ کیا گیا ۔اجلاس میں ملک بھر میں علماء و مشائخ کنونشنز اور علماء ، خطبائ، آئمہ ، مدرسین کیلئے تربیتی نشستوں کا فیصلہ کیا گیا ۔20 فروری کو پانچویں پیغام اسلام کانفرنس کنونشن سینٹر اسلام آباد میں منعقد کرنے کا فیصلہ ، کانفرنس میں امام حرم کعبہ ، مفتی اعظم فلسطین شریک ہوں گے،افغانستان کی صورتحال پر دنیا اسلام کے اہم مذہبی و سیاسی قائدین میں رابطوں کا فیصلہ کیا گیا ۔ اجلاس میں انتہا پسندی ، دہشت گردی ، بڑھتی ہوئی فحاشی و عریانی اور تکفیری سوچ کے خاتمے کیلئے پاکستان

 

 

 

 

طلباء کونسل کے تحت طلباء کنونشنز منعقد کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔اجلاس میں وزیر اعظم پاکستان عمران خان کی طرف سے سیرت اتھارٹی کے قیام کا خیر مقدم اور مکمل تعاون کا فیصلہ کیا گیا ۔مدارس کے تمام امتحانی بورڈز سے تعلیمی اور مدارس کے مسائل پر روابط قائم کرنے اور مدارس کے مسائل کے حل کیلئے حکومت کے ذمہ داران سے رابطوں کا فیصلہ کیا گیا ۔سوشل میڈیا ، ذرائع ابلاغ پر اسلامی تعلیمات ، نظریہ پاکستان کے خلاف مواد ہو ہٹانے اور پابندی لگانے کیلئے وزارت اطلاعات ، پیمرا ، پی ٹی اے سے رابطے کے ذریعے موثر حکمت عملی بنانے کا فیصلہ کیا گیا ۔ اجلاس میں پنجاب پولیس ، سلامتی کے اداروں کے شہداء کو خراج تحسین اور زخمیوں کیلئے دعا صحت کی گئی۔اجلاس میں سعودی عرب پر مسلسل حوثی باغیوں کے حملوں ، کابل اور عراقی وزیر اعظم پر حملے کی مذمت کی گئی۔ حزب اختلاف اور حزب اقتدار سے ملک کی موجودہ صورتحال میں باہمی مذاکرات اور مفاہمت سے مسائل کے حل کی اپیل کی گئی اور کہا گیا کہ عالمی سطح پر مہنگائی کے اثرات جو پاکستان میں مرتب ہو رہے ہیں ان کے تدارک کیلئے تمام جماعتیں اپنا کردار اد اکریں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *